• صارفین کی تعداد :
  • 1293
  • 3/23/2012
  • تاريخ :

ولايت علي عليہ السلام کي معرفت 2

علی (ع)

ولايت علي عليہ السلام کي معرفت 1

بقلم حميد قرباني

رسول خدا صلي اللہ عليہ و آلہ و سلم نے فرمايا: علي مع الحق و الحق مع علي؛ (1) علي عليہ السلام حق کے ساتھ ہيں اور حق علي عليہ السلام کے ہمراہ ہے- علي عليہ السلام کے بارے ميں بات کرنا، دشوار ہے اور اس تابناک چہرے کے شايان شان کلام زبان و قلم پر لانا زيادہ دشوار ہے؛ اور علي عليہ السلام کے چہرے کي طرف گھورنے سے انسان کي فکر جل جاتي ہے اور علي عليہ السلام کے گوناگوں پہلۆوں کي شناخت کے لئے پہاڑ کي مضبوطي اور استحکام کي ضرورت ہے اور انساني تاريخ کي والائيوں اور زيبائيوں کے مختصر سے بيان کے لئے دوسري زبان کي ضرورت ہے؛ در حقيقت فلک جتني عريض زبان کي ضروت ہے تا کہ زمين کے اس فرشتے کي شخصيت کي والائي، زيبائي اور بے مثالي کو مختصر سا اشارہ کيا جاسکے اور اس آسماني انسان کي شان کے لائق کلام تشکيل پاسکے-

فصل اول

علي عليہ السلام قرآن کے عظيم رازدار اور آسماني قاصد کي گويا زبان ہيں؛ علي عليہ السلام اور قرآن کا پيوند کبھي منقطع نہ ہونے والا پيوند ہے جو قيامت کے دامن اور حوض کوثر کے کنارے تک جاري رہے گا- پيغمبر صلي اللہ عليہ و آلہ و سلم يہ حقيقت حديث ثقلين ميں بھي اور اس حديث ميں بھي ـ کہ "علي (ع) قرآن کے ساتھ ہيں اور قرآن علي کے ساتھ ہيں يہ دو ہرگز جدا نہيں ہوتے حتي کہ حوض کوثر کے کنارے آپ (ص) پر وارد ہوجائيں" (2)؛ ـ ميں بيان فرما چکے ہيں- اس جملے سے واضح ہوتا ہے کہ علي عليہ السلام قرآن کريم کے معارف و تعليمات کے جدا ناپذير ہم نشين و ہمراہ و ہم راز ہيں جيسا کہ آپ (ع) نے خود بھي فرمايا ہے کہ: "خدا کي قسم! کوئي بھي آيت نازل نہيں ہوئي مگر يہ کہ ميں جانتا ہوں کہ کس چيز کے بارے ميں اور کہاں اور کس کے بارے ميں نازل ہوئي!؟"- (3)...

-------------

مآخذ:

1. تاريخ بغداد 14/321- کنزل الاعمال 6/157

2. علي با قرآن است. 2/233

3. دانش کتاب 10/53-